ترقی یافتہ ممالک کی جامعات میں بڑے پیمانے پر آن لائن تعلیم دی جا رہی ہے، ڈاکٹر عارف علوی

اسلام آباد:صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے کہا ہے کہ ورچوئل اور آن لائن پلیٹ فارمز کی مدد سے پاکستانی آرٹس، فیشن، ڈیزائن اور ٹیکسٹائل مصنوعات کو عالمی سطح پر پہچان اور پذیرائی دلائی جاسکتی ہے، جامعات فارغ التحصیل طلباءکی تعداد بڑھانے کے لیے آن لائن اور ورچوئل تعلیم پر توجہ دیں۔ ایوان صدرکے پریس ونگ سے جاری بیان کے مطابق ان خیالات کا اظہار انہوں نے پیر کو پاکستان انسٹیٹیوٹ آف فیشن ڈیزائن لاہور کے دورہ کے موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کیا، دورے کے دوران خاتون اول بیگم ثمینہ علوی بھی صدر مملکت کے ہمراہ تھیں۔صدر مملکت کو ادارے میں تعلیمی سرگرمیوں، کارکردگی اور مختلف شعبہ جات میں تعلیمی سہولیات کے بارے میں اس موقع پر بریفنگ دی گئی۔ انہوں نے کہا کہ طلباء کو کم وقت میں معاشرے کا فعال حصہ بنانے کے لیے مختصر مدتی کورسز کی مدد لی جاسکتی ہے، دنیا بھر میں مارکیٹ کی ضروریات کو پورا کرنے کے لیے مختصر مدتی کورسز کے ذریعے سے تعلیم دی جا رہی ہے۔ڈاکٹر عارف علوی نے کہا کہ دنیا میں مختلف شعبہ جات میں ایسوسی ایٹ ڈگری ہولڈرز اور سرٹیفیکیٹ ہولڈر افرادی قوت کو ترجیح دی جا رہی ہے، جامعات طلبہ کی تعداد بڑھانے کے لیے آئوٹ آف باکس سوچ اور جدت پر مبنی طریقے اپنائیں۔ صدر مملکت نے کہا کہ ترقی یافتہ ممالک کی جامعات میں بڑے پیمانے پر آن لائن تعلیم دی جا رہی ہے، آن لائن تعلیم کی مدد سے اخراجات کو کم اور کم وقت میں زیادہ طلبہ کو ہنر مند بنایا جاسکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ جامعات ورچوئل اور آن لائن پلیٹ فارمز پر اپنی موجودگی میں اضافہ کریں۔صدر مملکت نے پاکستان انسٹیٹیوٹ آف فیشن ڈیزائن کے دورے کے دوران مختلف فیشن مصنوعات کی نمائش کا جائزہ بھی لیا۔ صدر نے پاکستان انسٹیٹیوٹ آف فیشن ڈیزائن کے انڈسٹری، بین الاقوامی جامعات اور اداروں کے ساتھ روابط کو بھی سراہا۔

شیئر کریں