شمالی وزیرستان میں شہید ہونے والی چار خواتین کے ورثاء میں امدادی چیک تقسیم

پشاور: صوبائی حکومت کی طرف سے کمشنر بنوں ڈویژن شوکت علی یوسفزئی نے گزشتہ دنوں شمالی وزیرستان میں شہید ہونے والی چار خواتین کے ورثاء کو مالی امداد کی مد میں فی کس پانچ لاکھ روپے کے چیک ادا کیے۔ڈویژنل کمشنر بنوں شوکت علی یوسفزئی نے کہا کہ خواتین کو اس طرح ظلم و جبر سے قتل کرنا کسی بھی مہذب معاشرے کو زیب نہیں دیتا۔انہوں نے شہید خواتین کیلئے دعائے مغفرت بھی کی۔ اس موقع پر ڈپٹی کمشنر شمالی وزیرستان شاہد علی خان،ڈپٹی کمشنر بنوں کیپٹن (ر) محمد زبیر خان نیازی،ڈپٹی کمشنر لکی مروت،ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر شمالی وزیرستان شفیع اللہ خان گنڈاپور اور اسسٹنٹ کمشنر میران شاہ عدنان ابرار بھی موجود تھے۔ متوفی ارشادہ بی بی اور عائشہ بی بی کے والد فقیرزاد اور جویریہ بی بی کے والد محمد فاروق زمان اور ناہید بی بی کے بھائی امجد زمان نے چیک وصول کئے۔کمشنر بنوں ڈویژن شوکت علی یوسفزئی نے لواحقین سے اظہار ہمدردی کرتے ہوئے کہا کہ خواتین کے قتل پرپورا بنوں ڈویژن سوگوار ہے۔ اس موقع پر ڈپٹی کمشنر شمالی وزیرستان شاہد علی خان نے کہا کہ وہ تمام قانونی تقاضوں کو ملحوظ خاطر رکھتے ہوئے سوگواران کے ساتھ مکمل تعاون جاری رکھیں گے۔

شیئر کریں